Do it Noe

DO IT NOW SOMETIMES LETTER BECOMES NEVER.

Advertisements

عیسی طاہر سنجرانی کا چاغی کے عوام سے سوال

ایک صوبائی حلقے کو صرف ایم پی اے صاحب فنڈ کی مد میں سالانہ 32 کروڑ روپے ملتے ہیں, جبکہ اس سال 60 کروڑ ملے ہیں, یعنی 5 سالوں میں ایک ارب اٹھاسی کروڑ…جبکہ چاغی کو 36 کروڑ ڈاکٹر مالک بلوچ صاحب, ایک ارب وفاقی حکومت اور 20 کروڑ موجودہ وزیراعلی صاحب نے دیئے. تو مجموعی طور پر چاغی کوصرف موجودہ حکومت کے پانچ سالوں میں 3 ارب 44 کروڑ ملے ہیں…… 

کیا چاغی میں اس قدر خطیر فنڈز کے آثار ملتے ہیں….؟؟؟؟؟

کامیابی کا سفر


  • ​ایک آدمی سفر کیلیے روانہ ہوتا ہے اپنی منزل تک پہنچنے سے پہلے اسے پورا یقین ہوتا ہے کہ وہ مقررہ وقت پر منزل تک پہنچنے میں کامیاب ہوپاہے گا ۔ منزل تک پہنچنے پر اسے پتہ چلتا ہے کہ وہ جس مقصد کیلیے نکلا تھا وہ اسے اس منزل تک پہنچنے کے باوجود نہیں مل سکا ۔ اس پر وہ آدمی دلبرداشتہ ہوکر مزید آگے چلنے کی ہمت نہیں کرسکا ۔ اور اپنی مقصد کو حاصل کرنے میں تاحیات ناکام رہا ۔
  • اہک دوسرا آدمی جو منزل تک نہ پہنچنے پر ناامید ہونے کی بجاہے آگے مزید سفر کرکے منزل تک پہنچنے میں دوگنے وقت میں کامیاب رہا اور اپنے مقصد کو پالیا۔

منزل تک نہ پہنچنا ناکامی نہیں بلکہ منزل تک نہ پہنچ کر مایوس ہونا سب سے بڑی ناکامی ہے۔

صحافیوں کی راہے بہت اہم ہوتی ہیں لیکن

پانامہ کیس کے فیصلے میں بہت سے صحافیوں نے عمران

خان کا ساتھ دیا تو لیکن ان تمام صحافیوں کو نظرانداز کرکے مسلم لیگ کے کارکن حامد میر پر اپنا غصہ نکال رہے ہیں ۔ سوشل میڈیا پر شاید کوہی ایسا نوں لیگی سپورٹ ہوگا جس نے حامد میر کو گالی نہ دی ہو ۔ حالانکہ کہی صحافیوں نے پانامہ کیس پر عمران خان کے موقف کی   تاہید کی تھی ۔ جبکہ حامد میر نے تو بہت پہلے کہ چکے ہیں کہ 

دنیا میں اور بھی مسئلے ہیں پانامہ کے سوا۔

Testing 

اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو اردو 

اردو 

اردو